آنکھیں پُرنم

آنکھیں پُرنم

آنچ ہے مدّھم

زخمی تارے

آنکھ کا مرہم

غم کے بادل

چھم چھم‘ چھم چھم

ننھا سا دل

دنیا کا غم

ہار

کوئی پکارے

ہم ہیں تمھارے

ناؤ شکستہ

دُور کنارے

گرتے آنسو

ٹوٹے تارے

باغ الاؤ

پھول شرارے

چاند کی کشتی

نیل کے دھارے

دل کی دھڑکن

شعر ہمارے

کوئی جیتا ؟

ہم جب ہارے

شکیب جلالی

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s