کدھر کے رُخ پہ ہے، پہلے بَہَاؤ دیکھ تو لو

کنارِ آب اگر گھر بناؤ دیکھ تو لو
کدھر کے رُخ پہ ہے، پہلے بَہَاؤ دیکھ تو لو
سفر پہ جاؤ بڑے طمطراق سے لیکن
لگا سکو گے کنارے پہ ناؤ دیکھ تو لو
تمام زخم نہیں ہوتے ایک جیسے کبھی
گمان سے بھی نہ گَہرا ہو گھاؤ دیکھ تو لو
تمہاری چشمِ کرَم نے جو گُل کِھلائے ہیں
بس اِک نَظَر ہی سہی، آؤ آؤ دیکھ تو لو
نہ ہانکو ایک ہی لاٹھی سے ظالم و مظلوم
چراغ کس کا ہے پہلے ہَواؤ دیکھ تو لو
تُم اپنی اَنجمنِ ناز سے نکل کے کبھی
ہماری بزم کا بھی رَکھ رَکھاؤ دیکھ تو لو
قدم قدم پہ ہے بزمِ اَنا سجی ضامنؔ
شریکِ بزم نہ ہونا پہ جاؤ دیکھ تو لو
ضامن جعفری

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s