پِھر فقَط میں اُور جنونِ آبلہ پائی رَہا

کچھ دِنوں تَک تَو اُنہیں شوقِ مسیحائی رَہا
پِھر فقَط میں اُور جنونِ آبلہ پائی رَہا
کوچہِ اقدار میں اَچّھا رَہا اپنا قیام
ہم کو آسانی یہ تھی ہر دَرد آبائی رَہا
ایک بھی مانی نہ دُنیا کی ، سَدا اپنی کہی
اہلِ دانش! تم سے بہتر تَو یہ سودائی رَہا
اُن کا یہ احسان تھا ہر دَم تصوّر میں رَہے
اِس لیے اہلِ وفا کو پاسِ تنہائی رَہا
اُنگلیاں اُٹھتی رہیں ہر گام اہلِ جہل کی
زندگی بَھر مجھ کو ضامنؔ فخرِ رُسوائی رَہا
ضامن جعفری

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s