میں شامل ہوں جمالِ یار تجھ میں

نینا عادل ۔ غزل نمبر 13
مری خوشبو مرے اسرار تجھ میں!
میں شامل ہوں جمالِ یار تجھ میں
مسیحائی کو جس کی عشق آیا
کوئی ایسا پڑا بیمار تجھ میں
غبارِ ذات بیٹھے گا کوئی دم
گری ہے آخری دیوار تجھ میں
فسونِ شب بھی ہے قربان جس پر
سخن ایسا ہو ا بیدار تجھ میں!
ہوائے تند اور جلتے دیے ہیں
ازل سے برسرِ پیکار تجھ میں
تجھے ہے آرزو دنیا کی لیکن
کوئی دنیا سے ہے بیزار تجھ میں
ملن کے گیت گاتی ہے ازل سے
مری پازیب کی جھنکار تجھ میں
میں ہوں وہ شبد جو معدوم ہوتا
اگر پاتا نہیں اظہار تجھ میں
اضافی ہیں مجھے یہ دین و دنیا
مرے دونوں جہاں دلدار تجھ میں
نینا عادل

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s