کہ ہے سر پنجۂ مژگانِ آہو پشت خار اپنا

دیوانِ غالب ۔ غزل نمبر 1
اسدؔ ہم وہ جنوں جولاں گدائے بے سر و پا ہیں
کہ ہے سر پنجۂ مژگانِ آہو پشت خار اپنا
مرزا اسد اللہ خان غالب