شیشۂ مے سروِ سبزِ جوئبارِ نغمہ ہے

دیوانِ غالب ۔ غزل نمبر 282
نشّہ ہا شادابِ رنگ و ساز ہا مستِ طرب
شیشۂ مے سروِ سبزِ جوئبارِ نغمہ ہے
ہم نشیں مت کہہ کہ برہم کرنہ بزمِ عیشِ دوست
واں تو میرے نالے کو بھی اعتبارِ نغمہ ہے
مرزا اسد اللہ خان غالب