گویا چراغ وقف ہوں میں اس دیار کا

دیوان اول غزل 165
ہر شب جہاں میں جلتے گذرتی ہے اے نسیم
گویا چراغ وقف ہوں میں اس دیار کا
میر تقی میر