واقف نہیں ہواے چمن سے اسیر ہم

دیوان سوم غزل 1167
سرزیر پر ہیں دیر سے اے ہم صفیر ہم
واقف نہیں ہواے چمن سے اسیر ہم
کیا ظلم تھے لباس میں اس تنگ پوش کے
دل تنگی سے نکل گئے ہو کر فقیر ہم
دیکھ اس کو راہ جاتے تو بے حال ہو گئے
اب دیکھیے بحال کب آتے ہیں میر ہم
میر تقی میر