سو گریبان مرے ہاتھ سے یاں چاک ہوئے

دیوان اول غزل 567
بسکہ دیوانگی حال میں چالاک ہوئے
سو گریبان مرے ہاتھ سے یاں چاک ہوئے
سر رگڑ پائوں پہ قاتل کے کٹائی گردن
اپنے ذمے سے تو صد شکر کہ ہم پاک ہوئے
پائمالی سے فراغت ہی نہیں میر ہمیں
کوے دلبر میں عبث آن کے ہم خاک ہوئے
میر تقی میر