اب آئے تم تو فائدہ ہم ہی نہیں رہے

دیوان اول غزل 640
آنے کے وقت تم تو کہیں کے کہیں رہے
اب آئے تم تو فائدہ ہم ہی نہیں رہے
میر تقی میر