ننھے بچو!

ننھے بچو، مجھ کو اب تک یاد ہے، جب میں تمہاری عمر میں تھا

تب، وہ لوگ جو مجھ سے بڑے تھے، کتنے اچھے لوگ تھے

سچے اور بھلے!

ننھے بچو!

کل جب تم اس عمر میں ہو گے، میں جس عمر میں ہوں

تب وہ لوگ جو تم سے بڑے تھے

کبھی کے مٹی اوڑھ کے سارے سو بھی چکے ہوں گے

جانےتم اس وقت ہمارے بارے میں کیا سوچو گے!

شاید وہ دن بڑے کٹھن ہوں، پھر بھی اتنا کچھ تو یاد رکھو گے نا

کیسے لوگ تھے، خود تو اپنے لہو میں ڈوب گئے

لیکن اس مٹی پر آنچ نہ آنے دی

جس پر آج تمھاری آرزوؤں کے باغ مہکتے ہیں ۔۔۔

مجید امجد

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s