افریشیا

دریا کے پانیوں سے بھری جھیل کے کنارے

آئے ہیں دور دور سے افریشیا کے پنچھی!

اجلے پروں کا بھاگ ہیں یہ رزق جو اڑانیں!

اتنے سفر کے بعد یہ تٹ، یہ ذرا سا کھاجا

جوہڑ میں اک سڑی ہوئی پتی ۔۔۔ چُہوں کا چوگا

اک گھونٹ زرد کیچ کا ۔۔۔ مرغابیوں کا راتب

اور اس کے ساتھ گھات میں زد کارتوس کی بھی

چنگاریوں کے تیز تڑختے ہوئے تریڑے

اور پانیوں پہ بہتی ہوئی سنسناہٹوں میں

لہراتے پنکھ، ابھرتے کماندار، زندہ چوکس

آزاد آبناؤں میں جیتے ہیں جینے والے

ٹھنڈی ہوا کی باس میں، بارود کے دھوئیں میں

مجید امجد

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s