اڑیکا

پیا عجب اڑیکا

سدھی گل کوئی نہ سجھے

دیوا بن کے خیال

کدیں بلے کدیں بجھے

وچ نھیریاں تھوڑی لو

دیوے تھوڑی تھوڑی لو

تھکے پِٹ پِٹ متھا

کوئی ڈھکدا نہ ڈھو

وچ کہن نیئیں آوندے

ایس من دے ودھیکے

کھول تاکڑی کناو دی

اْدوں جند چیکے

اُدوں بھلیاں بُھلائیا ں

یاد آندیاں نیں گلاں

ایدوں الہڑ جوانی

پئی ماردی اے چھلاں

کنھوں کنھوں دئیے چھوڑ

کس کس نوں بلائیے

پلہ… فکروں چھڑا کے

کیہدا ذکر سنائیے

پیا رعجب اڑیکا

سدھی گل کوئی نہ سجھے

دیوا بن کے خیال

کدیں بلے کدیں بجھے

ماجد صدیقی (پنجابی کلام)

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s