ہوٹھاں اُتے، ڈوہنگی چپ دے تالے نیں

ماجد صدیقی (پنجابی کلام) ۔ غزل نمبر 26
اکھیاں اوہلے، سدھراں بھانبڑ بالے نیں
ہوٹھاں اُتے، ڈوہنگی چپ دے تالے نیں
منّیاں، ساڈیاں انگلاں، اگ دیاں پوراں نیں
قلماں دی ہوٹھیں، پر کَکر پالے نیں
گل نکھیڑے دی، کوئی پلے پیندی نئیں
ویلے کی کی وعدے، کل تے ٹالے نیں
ماجد صدیقی (پنجابی کلام)

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s