ایہہ گل وی ہن ست پرانی، ایس چ وی نئیں سُکھ

ماجد صدیقی (پنجابی کلام) ۔ غزل نمبر 99
میں ائی تینتھوں رُٹھڑا ڈھولا، مینوں ائی تیرا دُکھ
ایہہ گل وی ہن ست پرانی، ایس چ وی نئیں سُکھ
مینتھوں بچ توں چیتر وگدی، مست پُرے دی وا
میں ورہیاں دے بنے کھلوتا، پالے سڑیا رُکھ
پیار دی دیوی ستی سوں گئی، چرخے رہ گئی تند
جیون دے ریشم نوں بھورے، دیمک بن کے بُھکھ
میرا درد ونڈاندیا سجناں، اپنا وس وی ویکھ
لمے ہتھ تقدیر دے جھلیا، میں اگے نہ جھُکھ
اُنج ہسدیاں نوں پھُل آکھوتے ماجدُ، تہاڈا جی
ہوٹھ تہاڈے وی تِڑکا گئی، ایس موسم دی رُکھ
ماجد صدیقی (پنجابی کلام)

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s